اردو جواب پر خوش آمدید

0 ووٹس
59 مناظر
نے پوچھا حالات حاضرہمیں
کیا بینک کی نوکری کرنا جائز ہے اسلام میں اس کی کمائی حلال ہے یا نہیں اسلامی شریعت اس کے بارے میں کیا کہتی ہے آیا کہ اس کی کمائی کھا سکتے ہیں یا نہیں

1 جوابات

0 ووٹس
(10.4k پوائنٹس) نے جواب دیا

اردوجواب پر سوال شائع کرنے کے لئے ہم آپ کے مشکور ہیں تاہم آپ کے سوال کا حتمی جواب شاید آپ کوکہیں نہ مل پائے 

علماء کے درمیان اس میں بڑا اختلاف ہے اور یہاں یہ بات بھی آپ مد نظر رکھنا پڑے گی کہ آپ کے کام کی نوعیت کیا ہے اگر آپ اس حوالے سے سوال کریں گے تو شاید زیادہ بہتر طریقے سے جواب دیا یا ڈھونڈا جا سکے ۔

 

جاوید غامدی صاحب سے جب یہ سوال کیا گیا تو ان کا جواب کچھ یوں تھا

اس وقت ہمارا بینکاری کا نظام سود پر مبنی ہے۔ اس کی بتدریج اصلاح کرنی چاہیے لیکن اس میں بڑی قباحتیں ہیں۔ اس وجہ سے اگر آپ کوئی بہتر نوکری کر سکتے ہیں تو ضرور کریں۔ لیکن اس کو حرام نہیں کہا جا سکتا، اس لیے کہ ہم اس نظام کی اصلاح بھی کرنا چاہتے ہیں، ہماری عدالت میں بھی یہ معاملہ زیر بحث ہے، اس کی اصلاح کے لیے بہت سے اقدامات کرنے پیش نظر بھی ہیں اور لوگ کر بھی رہے ہیں۔ میرے خیال کے مطابق اب یہ اس نوعیت کاکام نہیں ہے جس کو رسالت مآب صلی اللہ علیہ وسلم نے قطعی حرمت کے ذیل میں رکھا تھا۔

آپ کی سہولت کے لئے میں چند ربط درج کر رہا ہوں آپ ایک نظر ان کو دیکھ لیجئے۔

 

سودی اداروںمیں ملازمت  سے متعلق سوال

بینک میں ملازمت کے بارے 

بینک میں نوکری سے متعلق ایک اور ربط

 

متعلقہ سوالات

السلام علیکم،

ارود جواب پرخوش آمدید۔

ہم آپ کو مطلع کرنا چاہتے ہیں کہ اردو جواب کو Q2A کے تازہ ترین ورژن 1.8پر اپ گریڈ کر دیا گیا ہے اور اس کے ساتھ تھیم میں بھی ضروری تبدیلیاں کی گئی ہیں۔

اگر سائٹ کے استعمال میں کہیں بھی دشواری کا سامنا ہو تودرپیش مسائل سے ہمیں ضرور آگاہ کیجیئے تاکہ ان کو حل کیا جا سکے۔

شکریہ



Pak Urdu Installer

ہمارے نئے اراکین

572 سوالات

740 جوابات

420 تبصرے

1.7k اراکین

...