اردو جواب پر خوش آمدید

+2 ووٹس
98 مناظر
نے پوچھا خاندان اور تعلقاتمیں

1 جوابات

+2 ووٹس
(800 پوائنٹس) نے جواب دیا
جی بالکل، اس میں کوئی مضائقہ نہیں بس اگر بات چیت ایک حد تک رہ کر کی جائے ورنہ زیادہ وقت ساتھ گزارنےسے بھی ایک دوسرے کی خامیوں پر نظر پڑھنے لگے گی اور یہ  جوڑے کی آئندہ شادی شدہ زندگی کے لئے مشکلات کھڑی کرسکتا ہے۔ کیونکہ ہوسکتا ہے ایک انسان  میں سے بہت سی خامیاں جو دور رہ کر بری لگیں، شادی کے بعد ساتھ رہنے سے آپ کو وہ نا گوار نہ گزریں یا آپ کا ہمراہی اسے شادی کے بعد خود ہی درست کرلے پر اگرچہ  شادی سے پہلے آپ کو ان باتوں اور عادتوں کا اندازا ہو چکا ہوگا تو وہ شخص اسے بہتر کرنے کا سوچے گا بھی تو دوسری سوچ یہ ہوگی کہ چلو اب تو میرے جیون ساتھی کو پتا ہی ہے۔۔۔ تو کیا فائدہ۔

جی، پر تھوڑی بہت understanding ہونے سے دونوں ہی کو فائدہ ہوتا ہے۔ اس لڑکی کو اپنے  ہونے والے شوہر،نئے گھر اور گھروالوں کی پسند، ماحول کا اندازا ہوجاتا ہے جسے اسے اپنے سسرال کے رنگ میں رنگنے میں اتنی مشکل نہیں ہوتی،اس لڑکی کی گھبراہٹ اور ڈر کم ہوجاتا ہے۔ دوسری طرف لڑکے کی بات کی جائے تو اسے بھی پتا ہوتا ہے کہ اس کی شادی جس لڑکی سے ہورہی ہے اس کی پسند نا پسند، اور اسے سمجھنے میں آسانی ہوتی ہے کیونکہ ایک دوستی کا رشتہ بن جاتا ہے۔ اور محبت تو حقیقتا  نکاح کے بعد ہی ہوتی ہے۔
(1.9k پوائنٹس) نے تبصرہ کیا
واہ انعم، بہترین جواب دیا ماشاءاللہ۔
(870 پوائنٹس) نے تبصرہ کیا
بہت خوب انعم ۔۔۔۔ اس سوال کا ایک پہلو یہ بھی تھا کہ اگر آئندہ کی ازواجی زندگی کے بارے میں ترجیحات اور منصوبہ بندی پر بھی اتفاق رائے قائم ہو جائے تو ازدواجی زندگی کی ابتدا بہتر انداز میں کی جا سکتی ہے۔

متعلقہ سوالات

0 ووٹس
1 جواب 110 مناظر

السلام علیکم،

ارود جواب پرخوش آمدید۔

ہم آپ کو مطلع کرنا چاہتے ہیں کہ اردو جواب کو Q2A کے تازہ ترین ورژن 1.8پر اپ گریڈ کر دیا گیا ہے اور اس کے ساتھ تھیم میں بھی ضروری تبدیلیاں کی گئی ہیں۔

اگر سائٹ کے استعمال میں کہیں بھی دشواری کا سامنا ہو تودرپیش مسائل سے ہمیں ضرور آگاہ کیجیئے تاکہ ان کو حل کیا جا سکے۔

شکریہ



Pak Urdu Installer

ہمارے نئے اراکین

531 سوالات

674 جوابات

523 تبصرے

3.3k اراکین

...