اردو جواب پر خوش آمدید

0 ووٹس
54 مناظر
(490 پوائنٹس) نے پوچھا حالات حاضرہمیں
نے زمرہ تبدیل کیا

کیا ایسے لوگوں کا اسلام سے کوئی تعلق ہے کیا یہ جہاد ہے کیا اس کو انسانیت کا نام دیا جا سکتا ہے؟

1 جوابات

0 ووٹس
(6.1k پوائنٹس) نے جواب دیا

اس کا مختصر جواب صرف اور صرف "نہیں" ہے
نہ ایسے لوگوں کا اسلام سے کوئی تعلق ہے ۔۔۔۔
نہ ہی یہ کوئی جہاد ہے۔۔۔۔۔
اور انسانیت تو یہ قطعاً نہیں ہے۔۔۔
اسلامی ریاست میں کی جانے والی فسادی کاروائیوں کوہر گز جہاد نہیں کہا جاسکتا۔۔۔۔
اللہ نے ایسے لوگوں کیلئے "دابۃ الارض" کے الفاظ استعمال کرکے ان کا سفلہ پن واضح کیا ہے
ایسے لوگوں کو نہ اسلام کا پتا ہے نہ ہی انکا اسلام سے کوئی تعلق ہے
میثاقِ مدینہ سے لے کر خلافت راشدہ کے تیس سال گواہ ہیں کہ اسلامی سلطنت میں غیر مسلم بھی نہایت امن سے رہا کرتے تھے ۔۔۔۔ تاریخ بتاتی ہے کہ ایک بار جب مسلمانوں نے کوئی مقبوضہ شہر (شاید دمشق )عسکری وجوہات کی بنا پر چھوڑا تو وہاں کی عوام سے لیا گیا "جزیہ" واپس لوٹا دیا گیا۔۔۔
(جزیہ وہ اسلامی ٹیکس ہے جو اسلامی سلطنت میں رہنے والے غیر مسلم ادا کرتے ہیں اور اس کے بدلے اسلامی ریاست ان کے جان و مال کی حفاظت کی ذمہ دار ہوتی ہے)

السلام علیکم،

ارود جواب پرخوش آمدید۔

ہم آپ کو مطلع کرنا چاہتے ہیں کہ اردو جواب کو Q2A کے تازہ ترین ورژن 1.8پر اپ گریڈ کر دیا گیا ہے اور اس کے ساتھ تھیم میں بھی ضروری تبدیلیاں کی گئی ہیں۔

اگر سائٹ کے استعمال میں کہیں بھی دشواری کا سامنا ہو تودرپیش مسائل سے ہمیں ضرور آگاہ کیجیئے تاکہ ان کو حل کیا جا سکے۔

شکریہ



Pak Urdu Installer

ہمارے نئے اراکین

538 سوالات

674 جوابات

613 تبصرے

3.4k اراکین

...